آل سعود کی منافقت

  • ہفتہ, 18 اگست 2018 11:46

شیعہ نیوز(پاکستانی شیعہ خبر رساں ادارہ) ریاض: سعودی عرب نے داعش تنظیم کے خلاف برسرپیکار اتحاد کے لیے 10 کروڑ ڈالر عطیہ کردئیے تاکہ شمال مشرق میں داعش سے آزاد کرائے جانے والے علاقوں میں اس دہشت گرد تنظیم کی منصوبہ بندی پر پابندی لگائی جاسکے۔سعودی سرکاری خبررساں ایجنسی ایس پی اے کے مطابق شام میں ان آزاد کرائے گئے علاقوں کے واسطے تب تک بین الاقوامی اتحاد کو پیش کی جانے والی یہ سب سے بڑی رقم ہے، اس طرح سعودی وزیر خارجہ عادل الجبیر کی جانب سے کیا جانے والا وعدہ بھی پورا ہوگیا جو انہوں نے 12 جولائی کو برسلز میں بین الاقوامی اتحاد کی وزارتی کانفرنس کے دوران کیا تھا۔اس کانفرنس کی میزبانی امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو نے کی تھی، سعودی عرب کی جانب سے اس خطیر رقم کا مقصد شام میں مقامی آبادی کو پھر سے سرگرم اور فعال بنانے کے واسطے بین الاقوامی کوششوں کو سپورٹ کرنا ہے۔ان کوششوں میں شامی شہریوں کو صحت، زراعت، بجلی پانی، تعلیم اور ٹرانسپورٹ کے شعبوں میں بنیادی خدمات پیش کرنا شامل ہے۔سعودی امداد کی رقم شامی تارکین وطن کی واپسی اور داعش تنظیم کی عدم واپسی کو یقینی بنانے کی کاوشوں میں بھی معاون ثابت ہوگی، سعودی عرب کا یہ اقدام امریکا اور عالمی اتحاد کے ساتھ قریبی شراکت کا ترجمان ہے، جس کا مقصد علاقائی خطرات کا سامنا کرنے کے لیے تمام شراکت داروں کی ایک اتحاد کی صورت میں ذمے داری میں شریک ہونے پر حوصلہ افزائی کرنا ہے۔

Leave a comment

Make sure you enter the (*) required information where indicated. HTML code is not allowed.