جیکب آباد، سندھ بلوچستان بارڈر پر پولیس افسر نے زائرہ خاتون کو گاڑی سے کچل کر شہید کردیا

  • منگل, 16 اکتوبر 2018 18:26

شیعہ نیوز(پاکستانی شیعہ خبر رساں ادارہ) چہلم امام حسین علیہ السلام کے موقع پر کربلا جانے والے زائرین میں ایک اور شہید کا اضافہ ہوگیا، خاتون پولیس گردی کا شکار ہوگئی، کراچی سے تعلق رکھنے والی زائر زبیدہ خانم کربلا پہنچنے سے پہلے ہی خالق حقیقی کو جا ملی، تفصیلات کے مطابق کراچی سے تعلق رکھنے والی خاتون زبیدہ خانم اپنے قافلے کے ہمراہ جب سندھ اور بلوچستان کے بارڈر جیکب آبادپہنچیں تو حسب معمول پولیس نے اُنہیں آگے بڑھنے سے روک دیا، جس کے بعد زائرین نے احتجاج کیا جسے کچلنے کے لیے پولیس نے اپنی گاڑی زائرین پر چڑھا دی جس کی زد میں آکر ایک خاتون زائرہ زبیدہ خانم شہید ہوگئی، ذرائع کے مطابق سندہ بلوچستان باڈرڈیرہ الہ یار تھانہ جیک آبادکے قریب سالار آفتاب حسین میرانی کے قافلہ کو پولیس نے روکا اوراین او سی کی آڑمیں 10000رشوت طلب کی کہ تب ہم آپ کو گذرنے دیں گے کافی دیر کے بعد کراچی کی خاتون زبیدہ خانم نے اتر کر التجا کی تو پولیس والو ںنے دھکا دے کر گرا دیا اورایس ایچ اونے گاڑی اوپر سے گزار دی اور اسے شہید کر دیا، ظلم کی انتھا کرتے ہوئے صرف لاش کو ہمراہ لے کر چلے گئے، واقعے میں ملوث پولیس اہلکار موقع سے فرار ہوگئے ہیں، جبکہ زائرین کا احتجاج جاری ہے۔

مجلس وحدت مسلمین سندھ کے سیکرٹری جنرل علامہ مقصود ڈومکی اوربلوچستان کے سیکرٹری جنرل مولانا برکت علی مطہری موقع پر پہنچ گئے، اس وقت سندھ بلوچستان بارڈر پر زائرین میں شدید غم وغصہ پایا جاتا ہے، مظاہرین کا مطالبہ ہے کہ موقع پر موجود ایس ایچ او کے خلاف دفعہ 302 کے تحت مقدمہ درج کیا جائے اور فوری کاروائی کرتے ہوئے گرفتار کیا جائے ،ایس ایس پی پولیس نے جائے وقوعہ پر پہنچ کر ایم ڈبلیوایم کے قائدین کو واقعے میں ملوث پولیس اہلکاروں کے خلاف ایف آئی آر کے اندراج کی یقین دہانی کروائی ہے،واضح رہے کہ اس سے پہلے 3 زائر تفتان بارڈر پر اور ایک زائر علمدار روڈ (کوئٹہ) پرحکومتی اور سکیورٹی اداروں کی غفلت کے باعث جاں بحق ہوچکے ہیں۔

Leave a comment

Make sure you enter all the required information, indicated by an asterisk (*). HTML code is not allowed.