پاکستانی شیعہ خبریں

کراچی میں چوبیس گھنٹوں میں چوتھی شہادت، ۳۰ سالہ جوان شہید

zaheer abbasکراچی کے علاقے گلبرگ میں تکفیری دہشت گردوں امریکی ایجنٹوں نے فائرنگ کرکے ۳۰ سالہ شیعہ جوان کو شہید کردیا۔ تفصیلات کیمطابق ۳۰ سالہ ظہیر عباس ابن نادر عباس کو تکفیری دہشت گردوں نےڈائمنڈ بیکری گلبرگ کے قریب اس وقت نشانہ بنایا جب وہ بچوں کو اسکول چھوڑ کر واپس آرہے تھے۔

ظہیر عباس معمول کے مطابق بچوں کو اسکول چھوڑ کر واپس آرہے تھے کہ ڈائمنڈ بیکری گلبرگ کے پاس دہشت گردوں نے ان پر فائرنگ کردی اور موقع پر ہی شہید ہوگئے، ظہیر عباس کی عمر ۳۰ سال کے قریب تھی اور وہ فیڈرل بی ایریا بلاک سترہ کے رہائشی تھے ۔ واضح رہے کہ ۲۴ گھنٹوں میں یہ چھوتھی شہادت ہے، کل شام پان منڈی میں تکفیری دہشت گردوں کی فائرنگ سے ایک ہی خاندان کے تین افراد (باپ اور دو بیٹے) کوشہید کردیا گیا تھا جبکہ ایک زخمی حالت میں اسپتال میں زیر علاج ہے۔ 

ان تینوں شہید مومنین کی نماز جنازہ بھی ادا نہ ہونے پائی تھی کہ آج صبح ظہیر عباس کو شہید کردیا گیا ہے ۔ شیعہ تنظیموں نے بھڑتی ہوئی فرقہ ورانہ دہشت گردی پر شدید ردعمل کا اظہار کیا ہے اور حکومت اور دہشت گردوں کے پشت پناہ عناصر کو متنبہ کیا ہے کہ پاکستان کو کمزور کرنے کے اس امریکی سازش کا حصہ نہ بنیں۔

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button