پاکستانی شیعہ خبریں

کراچی: بدھ کے روزکالعدم دہشت گرد ناصبی تکفیری گروہ نے شہر کراچی کو یرغمال بنائے رکھا،حکومت کہاں؟

siphashabaکراچی میں بدھ کے روز کالعدم دہشت گرد گروہ سپاہ صحابہ کے ناصبی تکفیری دہشت گردوں نے شہر کراچی کو بندوق کے زور پر یرغمال بنائے رکھا لیکن حکومت خاموش تماشائی بنی رہی۔شیعت نیوز کی رپورٹ کے مطابق کالعدم دہشت گرد ناصبی تکفیری گروہ سپاہ صحابہ (اہلسنت والجماعت) کے ناصبی تکفیری دہشت گرد بدھ کے روز شہر میں مسلح دندنانتے رہے اور لوگوں کو بندوق کے زور پر ہراساں کیا جاتا رہا جبکہ شہر بھر میں ناصبی تکفیری دہشت گردوں نے فائرنگ کر کے معصوم شہریوں کی املاک کو نقصان پہنچانے سمیت شہریوں کو زخمی بھی کردیا۔
ناصبی تکفیری دہشت گردوں کی فائرنگ سے درجنوں شہری زخمی ہوئے۔جبکہ تاجروں کو دھمکیاں دے کر کاروبار بند رکھوایا گیا۔
کالعدم دہشت گرد ناصبی تکفیری گروہ نے ناصبی دہشت گرد اورنگزیب فاروقی پر ہونے والے ایک ڈرامائی حملے کے خلاف ہڑتال کا اعلان کیا تھا ۔واضح رہے کہ ناصبی یزیدی دہشت گرد اورنگزیب فاروقی پر حملہ ہوا جس میں ڈرامائی انداز میں بچ گیا تاہم اس کے ساتھ موجود تمام سات افراد مارے گئے تھے۔
خفیہ زرائع نے بتایا ہے کہ ناصبی دہشت گرد اورنگزیب فاروقی پر ہونیو الا ڈرامائی حملہ در اصل ملک اسحاق گروپ کی جانب سے کیا گیا تھا کیونکہ فاروقی ناصبی دہشت گرد سرغنہ احمد لدھیانوی کے گروپ میں ہے جبکہ آج کل ملک اسحاق گروپ طاقت حاصل کرنے کے در پے ہے اور پارٹی کا اقتدار سنبھالنے کیلئے کوشش کر رہاہے۔
کراچی ٹرانسپورٹ اتحاد کے صدر سید ارشاد بخاری نے اعلان کیا کہ اس ے بہتر ہے کہ ناصبی دہشتگرد بسوں کو نذر آتش کر دیں لہذٰا بسیں بند رکھی جائیں۔
ناصبی یزیدی دہشت گردوں کی ہڑتال کے موقع پر پولیس اور رینجرز نے بھی انتہائی ڈرامائی کردار ادا کیا جبکہ ناصبی دہشت گردوں کی بلا وجہ اور دہشت گردانہ ہڑتال کے باعث شہریوں کو شدیدمشکلات کا سامنا کرنا پڑا جبکہ رکشہ اور ٹیکسی پر سفر کرنے سے دوگنا خرچ اٹھانا پڑا۔
شاہ فیصل کالونی میں ناصبی یزیدی تکفیری دہشت گردوں نے مسجد و امام بارگاہ حسینی مشن ٹرسٹ پر مسلح حملہ کیا اور مسجد پر فائرنگ کی جس کے نتیجہ میں مسجد کی متعدد دیواریں گولیوں کا نشانہ بنیں

Tags

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button