Uncategorized

سیکولر طبقے کے مقابلہ کیلئے مذہبی جماعتوں کا اتحاد ضروری ہے، پیر اعجاز ہاشمی

شیعہ نیوز (پاکستانی شیعہ خبر رساں ادارہ) جمعیت علما پاکستان کے مرکزی صدر پیر اعجاز احمد ہاشمی نے کہا ہے کہ مذہبی جماعتوں کا اتحاد سیکولر طبقے کے مقابلے کیلئے ضروری ہے، جو قیام پاکستان کے مقاصد کے حصول کیلئے ضروری ہے۔ متحدہ مجلس عمل کی بحالی کیلئے کام کر رہے ہیں، انشااللہ جلد خوشخبری سنائیں گے۔ لاہور میں اپنی رہائش گاہ پر میڈیا سے گفتگو میں پیر اعجاز ہاشمی نے کہا کہ وزیراعظم کا پاکستان کو لبرل بنانے کی خواہش کا اظہار قابل مذمت ہے، ملک کلمہ طیبہ کی بنیاد پر بنا تھا، کوئی مائی کا لال اسلامی جمہوریہ کی شناخت کو ختم نہیں کر سکتا۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان ہی نظریاتی ریاست کے طور پر ووٹ کے ذریعے دنیا کے نقشے پر نمودار ہوا، اس کیلئے عوام نے قربانیاں دیں، سیکولر ملک اگر بنانا ہی تھا تو متحدہ ہندوستان ہی میں ہی لوگ رہ لیتے لیکن پاکستان کو نظریاتی ریاست صرف اسلامی نظام کے نفاذ کیلئے بنایا گیا۔ ان کا کہنا تھا کہ متحدہ مجلس عمل کی جماعتوں نے ملک میں فرقہ واریت کیخلاف جہاد کرکے اتحاد امت کی مثال قائم کی۔ خیبر پختونخواہ میں حکومت قائم کی اور پارلیمنٹ میں متحرک اپوزیشن کا کردار بھی ادا کیا، یہ سب مذہبی قوتوں کے ایک پلیٹ فارم پر اکٹھا ہونے سے ہی ممکن ہوا۔ پیر اعجاز ہاشمی نے کہا کہ جمعیت علما پاکستان کی مجلس شوریٰ کے فیصلے کے مطابق وہ مختلف سیاسی جماعتوں کو ایک پلیٹ فارم پر لانے کیلئے کوشاں ہیں۔ جس کیلئے سیاسی مذہبی جماعتوں کے قائدین سے وہ رابطے میں ہیں۔

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close