دنیا

امریکی یہودی اسرائیل کو پسند نہیں کرتے۔ ٹرمپ کے بیان نے ہنگامہ مچا دیا

شیعہ نیوز:سابق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے اس بیان سے صیہونی حکومت میں ہنگامہ مچ گیا ہے جس میں انہوں نے کہا ہے کہ امریکی یہودی اسرائیل کو پسند نہیں کرتے۔

انکے اس بیان سے صیہونی حکومت کی سوشل میڈیا اور میڈیا میں ہنگامہ مچا ہوا ہے۔

الجزیرہ ٹی وی چینل کے مطابق، ٹرمپ کے ایک اسرائیلی نامہ نگار سے انٹرویو سے جس میں انہوں نے امریکی یہودیوں کے اسرائیل کو پسند نہ کرنے کی بات کہی، اسرائیل میں ہنگامہ مچ گیا ہے۔

ٹرمپ نے اپنے بیان میں جسے سبھی صیہونی میڈیا نے دوبارہ شائع کیا ہے، صاف طور پر کہا کہ امریکہ میں یہودی، اسرائیل کو پسند نہیں کرتے یا اسے کوئی اہمیت نہیں دیتے۔

سابق امریکی صدر کے بیان پر سوشل میڈیا میں بڑے پیمانے پر صیہونیوں کا رد عمل سامنے آ رہا ہے۔ امریکی یہودیوں کی کمیٹی نے ٹرمپ کے بیان کی تنقید میں ٹویٹ کیا: جناب ٹرمپ، یہودیوں کی خطرناک شبیہ سے کیوں دوبارہ پردہ اٹھا رہے ہیں۔

اس ٹویٹ میں آگے آیا ہے: ماضی میں ٹرمپ کی اسرائیل کو حمایت انہیں اس بات کی اجازت نہیں دیتی کہ وہ یہودی مخالف جذبات کی تجارت کریں یا اسرائیل کے ساتھ امریکی یہودیوں کے تعلقات سے متعلق ایسا جائزہ پیش کریں جو صحیح نہیں ہے، بہتر ہے وہ خاموش رہیں۔

قابل ذکر ہے کہ سابق صیہونی وزیر اعظم نتانیاہو کی حکومت میں ٹرمپ نے اسرائیل کی سب سے بڑی خدمت کرتے ہوئے امریکی سفارتخانے کو تل ابیب سے بیت المقدس منتقل کیا، لیکن 2020 کے انتخابات میں نتنیاہو نے ٹرمپ کو یہ صلہ دیا کہ بائیڈن کے انتخابات میں کامیاب ہونے کی سب سے پہلے مبارکباد دی، جس سے ٹرمپ نتنیاہو سے بہت ناراض ہیں۔

Tags

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button