مشرق وسطیہفتہ کی اہم خبریں

امریکی صدر سے گفتگو کے بعد شام پر حملہ کیا۔ ترک صدر

شیعہ نیوز (پاکستانی شیعہ خبر رساں ادارہ) ترکی کے صدر رجب طیب اردوغان نے شام پر حملہ کرنے سے قبل امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ سے گفتگو کی اور پھر شام پر حملہ کردیا۔

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے ترک صدر رجب طیب اردوغان کو خط لکھا ہے جس میں انہوں نے اپنے ہم منصب کو مشورہ دیتے ہوئے کہا ہے کہ سخت گیر نہ بنیں، بیوقوفی نہ کریں اورنہ ہی دنیا کو مایوس کریں، آپ اچھا کام کرسکتے ہیں، آئیں شام کے مسئلے پر سمجھوتہ کرلیں۔

دوسری جانب ترک صدررجب طیب اردوغان نے غیرملکی ٹی وی کو انٹرویو دیتے ہوئے امریکی نائب صدر اور وزیرخارجہ کے ساتھ ملاقات سے انکار کرتے ہوئے کہا ہےکہ شام کے مسئلے پرمائیک پینس اورمائیک پومپیوسےنہیں ملوں گا، امریکی وفد سے بات نہیں کروں گا شام کے مسئلے پر صرف صدر ٹرمپ سے براہ راست ڈیل کروں گا۔

واضح رہے کہ شمالی شام میں ترکی کی فوجی کارروائی ترک صدر رجب طیب اردوغان اور امریکی صدر ڈونالڈ ٹرمپ کے درمیان ٹیلی فون پر بات چیت کے بعد شروع ہوئی ہے۔

شمالی شام پر ترکی کے فوجی حملوں کی شام ، عالمی برادری اور یورپی ممالک کی جانب سے سخت مخالفت ہو رہی ہے۔

Tags

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button