اسلامی تحریکیںپاکستانی شیعہ خبریںہفتہ کی اہم خبریں

تفتان بارڈر پر اب تک زائرین کے لیے مناسب اقدامات نہیں کیے گئے

شیعہ نیوز (پاکستانی شیعہ خبر رساں ادارہ) شیعہ علماء کونسل پاکستان کے مرکزی سیکرٹری جنرل علامہ عارف حسین واحدی کہتے ہیں کہ کورونا وائرس عالمی وبا بن چکا ہے، اس وائرس کا مقابلہ تمام ممالک کو مل کر کرنا ہوگا۔ صورتحال سے نمٹنے کے میکنزم کو موثر اور بہتر بنایا جائے اور عوام کو وائرس کے خطرات سے آگاہ کیا جائے۔

انہوں نے کہا کہ علامہ سید ساجد علی نقوی کے بیان کے مطابق روایتی انداز سے ہٹ کر سنجیدہ کاوشیں وقت کی ضرورت ہے، افسوس کہ تفتان بارڈر پر جن منظم ہنگامی اقدامات کی ضرورت تھی ابھی تک وہ نہیں اُٹھائے گئے۔ اِن خیالات کا اظہار اُنہوں نے ملک میں پھیلتے وائرس اور تفتان بارڈر کی تازہ صورتحال پر ذمہ داران کی توجہ مبذول کراتے ہوئے کیا۔

ان کا کہنا تھا کہ بارڈر پر خیموں اور عارضی قیام گاہوں میں موجود زائرین کسمپرسی کی حالت میں ہیں، رضائیوں کی قلت ہے، ٹوائلٹس تنگ، نامناسب اور تعداد میں کم ہیں۔ مثال کے طور پر 270 افراد کیلئے صرف 4 ٹوائلٹس ہیں اور کچھ افراد کو تو گیراج میں ٹھہرایا گیا ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ علامہ ساجد نقوی کی ہدایت پر صدر مملکت سمیت اہم وزراء اور ذمہ داران سے ملاقاتیں کیں اور پیغامات پہنچائے کہ زائرین کے مسائل کے قابل قبول اور مناسب حل کیلئے روایتی انداز سے ہٹ کر سنجیدہ کوششوں کی اشد ضرورت ہے، جس سے آسانیاں پیدا کی جاسکتی ہیں۔

اُنہوں نے کہا کہ پاک ایران بارڈر پر بزنس ویزہ کے حامل افراد کی ایران آمدورفت پر کوئی میڈیکل چیک اپ ہورہا ہے نہ ہی اُنہیں بارڈر پر قرنطینہ میں رکھا جارہا ہے، نیز غیرقانونی افراد کی ایران و پاکستان آمدورفت بھی پہلے کی طرح جاری و ساری ہے جبکہ زائرین کو روک رکھا ہے اور ان کی روانگی کا پروگرام بھی نہیں دیا جا رہا، یہ دہرا معیار اور امتیاز، خلاف آئین و قانون ہے، جس کا تدارک ضروری ہے۔

علامہ عارف واحدی نے کہا کہ تفتان بارڈر سمیت تمام ایئرپورٹس پر انتظامات کو مزید وائرس پروف بنایا جائے، وبا سے نمٹنے کے میکنزم کو موثر اور بہتر بنایا جائے۔

Tags

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close