دنیا

جرمن چانسلر نے بھی اسرائیلی وزیراعظم کا اعلان مسترد کردیا

شیعہ نیوز (پاکستانی شیعہ خبر رساں ادارہ) جرمن چانسلر انگیلا میرکل نے کہا کہ ان کا ملک اسرائیلی وزیراعظم بنجمن نیتن یاہو کے وادی اردن کے علاقے کو اسرائیلی خودمختاری کے تحت لانے کا اعلان مسترد کردیا ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ مقبوضہ وادی اردن کے بارے میں نیتن یاھو کے موقف سے اتفاق نہیں۔

انہوں نے اردن کے شاہ عبداللہ دوم کے ساتھ ایک نیوز کانفرنس میں کہا کہ جرمن حکومت دو ریاستی حل کی حامی اور فریقین کےدرمیان عالمی برادری کی نگرانی میں بامقصد مذاکرات کی حمایت کرے گی تاہم یک طرف طور پر اسرائیل کا کوئی اقدام قبول نہیں کیا جائے گا۔

خیال رہے کہ نیتن یاھو نے 10 ستمبر کو یہ اعلان کیا تھا کہ اگر وہ انتخابات میں کامیاب ہوجاتے ہیں تو وہ وادی اردن ، شمالی بحیرہ مردار اور بستیوں کو اسرائیل میں ضم کرنے کا اعلان کریں گے۔ ان کے اس اعلان پرعالمی سطح پر شدید رد عمل سامنے آیا تھا۔

اردنی فرمانروا نے بھی نیتن یاھو کے اعلان کے خطرناک نتائج سے خبردار کیا۔

انہوں نے کہا: ’’اس طرح کے اقدام سے براہ راست اثر اردن اور اسرائیل کے تعلقات پر پڑے گا اور یہ فلسطینیوں اور اسرائیلیوں کی مذاکرات کی میز پر واپسی کے لیے کی جانے والی مساعی متاثر ہوں گی۔‘‘

Tags
Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close