پاکستانی شیعہ خبریںہفتہ کی اہم خبریں

آئی ایس او کے زیر اہتمام جامع مسجد نور ایمان پر امظاہرہ

شیعہ نیوز (پاکستانی شیعہ خبر رساں ادارہ) امامیہ اسٹوڈنٹس آرگنائزیشن پاکستان کراچی ڈویژن کی جانب سے معروف قانون دان، سابق مرکزی صدر آئی ایس او پاکستان برادر یافث نوید ہاشمی اور دیگر اسیرانِ ملتِ جعفریہ کی جبری گمشدگی کے خلاف بعد از نمازِ جمعہ جامع مسجدِ نورِ ایمان ناظم آباد پہ احتجاجی مظاہرہ کیا گیا.

زرائع کے مطابق امامیہ اسٹوڈنٹس آرگنائزیشن پاکستان کے سابق صدر اور معروف قانون دان یافژ نوید ہاشمی اور دیگر اسیران ملت جعفریہ پاکستان کی جبرتی گمشدگی کے خلاف ملک بھر کی طرح کراچی میں بھی احتجاجی مظاہروں کا انعقاد کیا گیا۔ آئی ایس او کراچی ڈویژن کے زیر اہتمام مرکزی مظاہرہ جامعہ مسجد نور ایمان پر منعقد کیا گیا۔احتجاجی مظاہرے سے جامع مسجدِ نورِ ایمان کے امام جمعہ مولانا زاہد حسین اور آئی ایس او کراچی ڈویژن کے ڈپٹی محب انچارچ برادر احمد علی نے خطاب کیا. مقررین کا خطاب کرتے ہوئے کہنا تھا کہ عرصۂ دراز سے محبِ وطن پاکستانیوں کو جبری طور پر گمشدہ کیا جارہا ہے. انجینئرز، ڈاکٹرز، اساتید، علماء کرام اور نوجوانوں کو مسلسل لاپتہ کردیا جاتا ہے. ملک میں جنگل کا قانون ہونے کی وجہ سے کوئی پاکستانی محفوظ نہیں.مقررین کا کہنا تھا کہ ایک ایسے وقت میں کہ جب ملک کشمیر کی آزادی کے لیے جدوجہد کررہا ہے اور مسئلہ کشمیر تاریخ کے سنگین ترین موڑ پر آگیا ہے.ایسے وقت میں دارلحکومت اسلام آباد سے معروف قانون دان یافث ہاشمی کی جبری گمشدگی سیکیورٹی اداروں کی کارکردگی پر سوالیہ نشان ہے.

مقررین کا وزیرِ اعظم پاکستان، آرمی چیف، صدرِ مملکت اور چیف جسٹس سے لاپتہ شیعہ افراد کی بازیابی و رہائی کا مطالبہ کرتے ہوئے کہنا تھا کہ اگر ہمارے لاپتہ افراد کو رہا نہیں کیا گیا تو ہم آئینی و جمہوری حق یعنی پُرامن احتجاج کا حق رکھتے ہیں اور تمام اسیران کی بازیابی تک پرُامن احتجاج جاری رکھیں گے.احتجاجی مظاہرے میں آئی ایس او کے جوانوں سمیت مومنین کی بڑی تعداد نے شرکت کی.

Tags
Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close