مشرق وسطی

آیت اللہ العظمیٰ خامنہ ای کی موجودگی میں حضرت فاطمہ زہرا (س)کی شہادت کی مجلس عزا

شیعہ نیوز:رہبر معظم انقلاب اسلامی حضرت آیت اللہ العظمیٰ خامنہ ای کی موجودگی میں حضرت فاطمہ زہرا (س) کی شہادت کی مناسبت سے مجلس عزا کی دوسری شب امام خمینی (رہ) حسینیہ میں منعقد ہوئی۔

اس مجلس میں حجت‌الاسلام والمسلمین رفیعی نے خطاب میں اس بات پر زور دیتے ہوئے کہ مغرب کے برعکس، ’’عورت‘‘ کے بارے میں اسلام کا نظریہ ایک شے کا نظریہ نہیں ہے۔

انہوں نے کہا کہ اسلام مفید شعبوں میں خواتین کی سماجی موجودگی ہے اور تعلیم، ثقافت اور صحت جیسی تعمیرات اور تاریخی شواہد بھی ان شعبوں میں حضرت فاطمہ زہرا (س) سمیت مسلم خواتین کی موجودگی کو ظاہر کرتے ہیں، لیکن سماجی سرگرمیاں خواتین کو اس طرح سے ہونا چاہئے کہ خاندان کی رازداری اور حدود کا احترام کرتے ہوئے خاندان کے مرکز کو نقصان نہ پہنچے۔

نیز اس تقریب میں جناب میثم مطیعی نے اس مجلس میں نوحہ خوانی کی۔
دوسری جانب ایرانی فوج کے ڈپٹی کوآرڈینیٹر نے مکران نامی 3600 ایچ پی کی طاقت کے حامل ملک کے پہلے مقامی بحری انجن کی نقاب کشائی سے متعلق کہا کہ اس شعبے میں ملکی ساختہ مصنوعات کی پیداوار میں اضافہ ہوگا۔

رپورٹ کے مطابق، ایڈمیرل حبیب اللہ سیاری نے بحریہ کے میدان میں ملکی پیداوار کی کامیابیوں کی وضاحت کرتے ہوئے کہا کہ گزشتہ ہفتے اسلامی جمہوریہ کی بحریہ کے ساتویں بیس "آذر” پر ایران کے پہلے دیسی بحریہ انجن کی رونمائی کی گئی جس کی طاقت 3600 ایچ پی ہے اور اسے مکران کا نام دیا گیا ہے۔

فوج کے ڈپٹی کوآرڈینیٹر نے مزید کہا کہ اس شعبے میں ملکی پیداوار جاری رہے گی کیونکہ ہمیں اپنی ضروریات کو پورا کرنے کے لیے پیداوار کے علاوہ ان مصنوعات کو بہتر بنانے پر کام کرنا ہوگا۔

ایڈمیرل سیاری نے 1401 کے شمسی سال کے بجٹ بل کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ ہمارے پاس دفاعی بجٹ اور دفاع کو مضبوط بنانے کے لیے درخواستیں ہیں، جنہیں ہم خصوصی پارلیمانی کمیٹیوں میں شرکت کرکے اٹھائیں گے۔

Tags

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button