اسلامی تحریکیںپاکستانی شیعہ خبریںہفتہ کی اہم خبریں

31 ویں برسی امام خمینی ؒپر علامہ راجہ ناصر عباس جعفری کا پیغام

شیعہ نیوز (پاکستانی شیعہ خبر رساں ادارہ) سربراہ مجلس وحدت مسلمین پاکستان علامہ ناصرعباس جعفری نے کہا ہے کہ بانی انقلاب اسلامی امام خمینی (رح) کا وجود طاغوتی و استکباری طاقتوں کے اسلام دشمن عزائم کے سامنے مضبوط ڈھال تھا، انہوں نے جرات و استقامت سے اسلام کی طاقت و حقانیت کو تسلیم کرایا، امام خمینی کی کامیابی کا بنیادی سبب ان کے قول و فعل میں ہم آہنگی تھی۔

امام خمینی (رح) کی 31ویں برسی کے موقع پر میڈیا سیل سے جاری اپنے بیان میں ایم ڈبلیو ایم سربراہ نے کہا کہ امام خمینی نے جو کہا ہمیشہ اس پر قائم رہے اور اس کا عملی مظاہرہ کرکے دکھایا، امام خمینی کی لغت میں ناکامی نام کا کوئی لفظ درج نہیں تھا، آپ اسلامی تعلیمات کے حقیقی پیروکار تھے جنہوں نے طرز معاشرت کے اصول اہل بیت اطہار علیہم السلام اور کلام ربی سے اخذ کر رکھے تھے۔

انہوں نے کہا کہ اس وقت پوری دنیا میں مسلمان زوال کا شکار ہیں جس کا بنیادی سبب اپنے حقیقی خدا سے دوری اور دنیاوی خداؤں کی پرستش ہے، اگر زبانی اقرار کے ساتھ دل و جان سے خدا بزرگ و برتر پر پختہ ایمان قائم کرلیا جائے تو دنیاوی خوف کو شکست دی جا سکتی ہے، موجودہ معاشرے میں فکر خمینی کو شعار بناکر ہی باوقار طرز زندگی اختیار کیا جاسکتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ امام خمینی نے اس حقیقت کا درک کرلیا تھا کہ سامراجی قوتوں کا اولین ہدف عالم اسلام ہے، یہود و نصاریٰ سے امت مسلمہ کا امن وسکون کبھی بھی ہضم نہیں ہو سکتا، یہود و نصاریٰ نے مسلمانوں کو کمزور کرنے کے لئے ان کے اندر سے پھوٹ ڈالنے کی ہر ممکن کوشش کی۔

ان کا کہنا تھا کہ امام خمینی نے بابصیرت اور کمال دانشمندی کے ساتھ اسلام دشمن قوتوں کے عزائم کو خاک میں ملا دیا، انہوں نے ہمیشہ اتحاد امت پر زور دیا، مسلمانوں کی بقاء و سلامتی باہمی اتحاد میں ہی مضمر ہے، ہمیں اس حقیقت سے لمحہ بھر بھی غافل نہیں رہنا چاہیئے، آج بھی یہود و نصاریٰ پر عالم اسلام کے اس عظیم القدر مجاہد کے نام سے خوف و لرزا طاری ہے، یہی وجہ ہے کہ آج بھی امام خمینی کی شخصیت کو متنازع ثابت کرنے کے لئے دشمن کی جانب سے ایڑھی چوٹی کا زور لگایا جا رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ بانی انقلاب اسلامی آج بھی چاہنے والوں کے دلوں میں زندہ ہیں اور ان کا نام مٹانے والوں کے نام کو بھی کوئی نہیں جانتا۔

Tags
Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close