پاکستانی شیعہ خبریںہفتہ کی اہم خبریں

شہید فخری زادہ کی شہادت و بیرونی جارحیت قابل مذمت ہے، علامہ ساجد نقوی

شیعہ نیوز: علامہ سید ساجد علی نقوی نے ایران کے ایٹمی اور دفاعی سائنسدان محسن فخری زادہ کی مظلومانہ شہادت و بیرونی جارحیت کو قابل مذمت قرار دیتے ہوئے ایٹمی سائنسدان کی شہادت پر رہبر انقلاب اسلامی حضرت آیت اللہ علی خامنہ ای ،سوگوار خاندان اورایرانی قوم سے اظہار تعزیت کیا ہے جبکہ پاکستانی قوم کی جانب سے بھی دلی ہمدردی کا پیغام بھی پہنچایا۔

علامہ سید ساجد علی نقوی نے اپنے تعزیتی پیغام میں کہاکہ انسانی فطرت کا تقاضا ہے کہ کوئی انسان کسی دوسرے بے گناہ انسان کی جان نہیں لے سکتا جبکہ سائنسدانوں، دانشوروں، سکالرز، علماءاور مختلف شعبہ ہائے زندگی سے تعلق رکھنے والی شخصیات کی جان لینا بہت بڑی زیادتی ہے کیونکہ یہ شخصیات اپنے دائرہ کار میں رہتے ہوئے انسانیت کی خدمت پر مامور ہوتے ہیں اور ایسے افراد کا قتل کھلی زیادتی کے ساتھ قومی و بین الاقوامی جرم تصور کیا جاتاہے لہٰذا ایسے قبیح فعل کے مرتکب مجرم کسی ر عایت کے مستحق نہیں ہوتے کیونکہ اگر ایسے دہشت گردوں اور مجرموں کو کیفرکردار تک نہ پہنچایا جائے تو دنیا کا امن برقرار رہ سکتاہے نہ ہی انسانی معاشرہ ایسے درندوں کو برداشت کرسکتاہے۔

انہوںنے محسن فخری زادہ کی شہادت پر اظہار تعزیت کرتے ہوئے عالمی اداروں سے مطالبہ کیاکہ ان کی ذمہ داری بنتی ہے کہ وہ اس سانحہ کی کھلی تحقیقات کرائیں اور مجرموں کو کیفرکردار تک پہنچائیں تاکہ دنیا کو افراتفری اور بد امنی سے بچایا جاسکے۔

دریں اثنا علامہ عارف حسین واحدی نے اپنے تعزیتی پیغام میں کہاکہ شہید محسن فخری زادہ نے اپنے ملک و قو م کیلئے جو خدمات سرا نجام دیں ہیں وہ قابل تعریف ہیں اور انہوںنے ملک کو سائنسی میدان میں مستحکم اور نا قابل تسخیربنانے کیلئے اپنی قیمتی جان تک قربان کر دی۔

انہوںنے مزید کہا کہ شہید محسن فخری زادہ کی شہادت کی کڑیاں صیہونی دہشت گردوں کی جانب جارہی ہیں جن کا مقصد ایران کو کمزور کرنا ہے۔

آخر میں انہوںنے کہا کہ دہشت گردی کا ارتکاب چاہے وہ کسی شخص یا حکومت کی جانب سے کیا جائے، ایک بین الاقوامی جرم اور اقوام متحدہ کے چارٹر کی خلاف ورزی ہے، سلامتی کونسل سمیت دیگر عالمی اداروں کو نوٹس لینا چاہئے۔ اس وقت عالمی سامراج نہیں چاہتا کہ کوئی مسلم ریاست ایٹمی طاقت بن سکے ۔امہ اور امن پسند دنیا کا اتحاد وقت کی ضرورت ہے۔

Tags

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close