دنیا

ترکی اور اٹلی کا متبادل امن منصوبہ تیار کرنے پر غور

شیعہ نیوز (پاکستانی شیعہ خبر رساں ادارہ) اٹلی کے ایک رکن پارلیمنٹ میشل بیراس نے بتایا کہ ان کا ملک ترکی کے ساتھ مل کر امریکہ کے مشرق وسطیٰ امن منصوبے’’صدی کی ڈیل‘‘ کا متبادل امن منصوبہ پیش کرسکتے ہیں۔

رپورٹ کے مطابق ٹرمپ کے مزعومہ امن منصوبے پر بات کرتے ہوئے اطالوی رکن پارلیمنٹ کا کہنا تھا کہ عالمی برادری نے امریکی صدر ٹرمپ کے مشرق وسطیٰ منصوبے سے اتفاق نہیں کیا ہے۔

مسٹر بیزاس نے ان خیالات کا ظہار ملائیشیا کے دارالحکومت کوالالمپور میں منعقدہ القدس پارلیمنٹیرینز ایسوسی ایشن کے اجلاس سے خطاب میں کیا۔

میشل بیزاس نے کہا کہ امریکی صدر ٹرمپ کے امن منصوبے میں بیت المقدس کو اسرائیل کا دارالحکومت تسلیم کیا گیا ہے۔ اٹلی سمیت دیگر یورپی ممالک اس سے اتفاق نہیں کرتے بلکہ وہ اسے مسترد کرچکے ہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ اس میں کوئی شک نہیں کہ القدس اسرائیل کا دارالحکومت ہوگا مگر القدس پوری دنیا کا معنوی دارالحکومت اور امن ومکالمے کا دارالحکومت ہے۔

Tags
Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close