پاکستانی شیعہ خبریں

پرندوں کا غیر قانونی شکار، قطری شہزادے کی گرفتاری اور جرمانہ

شیعہ نیوز (ڈی آئی خان) خیبر پختونخوا کی حکومت نے پرندوں کا غیر قانونی شکار کرنے پر قطر کے ایک شہزادے پر 80 ہزار روپے کا جرمانہ عائد کردیا ہے۔ قطری شہزادے کو تین شکاری بازوں کے ساتھ ڈیرہ اسماعیل خان سے گرفتار کیا گیا تھا، جس کے بعد اس حوالے سے پاکستان تحریک انصاف کے سربراہ عمران خان نے اپنے ٹوئٹر آکاونٹ پر پیغامات بھی جاری کیے۔ عمران خان کا کہنا تھا کہ کے پی حکومت صوبے میں موجود نایاب جانوروں کو بچانے کی ہر ممکن کوشش کررہی ہے لیکن وفاق میں حکمران جماعت مسلم لیگ ن نے ان پرندوں کے شکار کیلئے لائسنس اور پرمٹ جاری کردیئے ہیں، جو قانون کی کھلی خلاف ورزی ہے۔ خیبر پختونخوا حکومت کی جانب قطری شہزادے کو گرفتار اور جرمانہ کرنے پر پی ٹی آئی کے سربراہ کا کہنا تھا کہ ’یہی نئے اور پرانے پاکستان میں فرق ہے‘۔ عرب ممالک سے تعلق رکھنے والے شاہی خاندانوں کے افراد اکثر پاکستان کے مختلف علاقوں میں نایاب پرندوں اور جانوروں کے شکار کے لیے آتے ہیں۔ شکار کے سیزن میں قطر، متحدہ عرب امارات اور سعودی عرب کے شاہی خاندان بلوچستان کے علاقوں دالبدین، چاغی او دیگر علاقوں کا رخ کرتے ہیں۔ پاکستان میں ان شہزادوں کو جن نایاب نسل کے پرندوں کے لائسنس جاری کیے گئے ہیں ان میں بلوچستان میں موجود تلور بھی شامل ہے۔ پاکستان آنے والے شاہی خاندانوں کے مقامی علاقوں میں موجود قبائلی سرداروں کے ساتھ روابط قائم ہیں جو ان کو شکار میں مدد فراہم کرتے ہیں۔

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button