پاکستانی شیعہ خبریںہفتہ کی اہم خبریں

شہید ذیشان حیدر کے قاتلوں کو سزا نہ ملی تو حالات کی ذمہ دار انتظامیہ ہوگی

شیعہ نیوز (پاکستانی شیعہ خبر رساں ادارہ) مجلس وحدت مسلمین خیبر پختونخوا کے صوبائی رہنما اور تحصیل چیئرمین علامہ مزمل حسین فصیح نے صدہ بائی پاس کے قریب شیعہ نوجوانوں کی گاڑی پر دہشت گردانہ حملے کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ اگر حکومت نے ذمہ داراوں کے خلاف کاروائی نہ کی تو حالات خراب ہونے کی تمام تر ذمہ داری پاراچنار انتظامیہ پر ہوگی۔

انہوں نے کہا کہ دن دیہاڑے ایم بی بی ایس کے طالب علم کو شہید کیا جانا سیکورٹی اداروں کی غفلت ہے۔ پاراچنار انتظامیہ کو کرم کے امن کے حوالے سے ہم نے بارہا آگاہ کیا ہے مگر انتظامیہ اپنی پیشہ وارانہ ذمہ داریوں سے مجرمانہ غفلت برت رہی ہے۔

یہ خبر بھی پڑھیں فوری خبر، صدہ بائی پاس پر مومنین کی گاڑی پر حملہ 1 مومن شہید2 زخمی

علامہ مزمل حسین فصیح نے کہا کہ ضلع کرم کے شیعہ سنی امن چاہتے ہیں مگر کچھ ملک دشمن عناصر شرانگیزی میں مصروف ہیں وہ شیعہ سنی کو متحد نہیں دیکھ سکتے۔ پاراچنار میں گزشتہ مہینے سے طے شدہ منصوبے کے تحت دانستہ طور پر حالات خراب کئے جارہے ہیں۔ کبھی شیعہ نوجوان شاہ حسین کو قتل کیاجاتا ہے تو کھبی اہلسنت نوجوان کا قتل کیا جاتا ہے۔ کھبی اہلبیت اطہار ؑ کی شان میں بدترین گستاخی کا ڈھٹائی کے ساتھ ارتکاب کیا جاتا ہے۔ اب ان سارے واقعات کے باوجود حکومتی اداروں کی طرف سے مسافروں کے لئےسیکورٹی نہ دینا سمجھ سے بالاتر ہے۔

انہوں نے کہا کہ صدہ بائی پاس پر فائرنگ انتہائی افسوس ناک واقعہ ہے ، ہم ذیشان حیدر کی شہادت پر سراپا احتجاج ہیں۔اگر حکومت نے ذمہ داراوں کے خلاف کاروائی نہ کی تو حالات خراب ہونے کی تمام تر ذمہ داری پاراچنار انتظامیہ پر ہوگی۔

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button