پاکستانی شیعہ خبریںہفتہ کی اہم خبریں

ایٹمی ملک ہونے کے باوجود کراچی میں کچڑا اٹھانے کا نظام نہیں

شیعہ نیوز (پاکستانی شیعہ خبر رساں ادارہ) شیعہ علماء کونسل پاکستان صوبہ سندھ کے صدر علامہ سید ناظر عباس تقوی کا صوبائی دفتر سے جاری بیان میں کہنا ہے کہ ایٹمی ملک ہونے کے باوجود کراچی میں کچڑا اٹھانے کا نظام موجود نہیں ہے۔

علامہ ناظرتقوی کا کہنا تھا کہ شہر کراچی اس وقت گندگی اور غلاظت کے ڈھیر میں تبدیل ہوچکا ہے، شہر کراچی جو کسی زمانے میں روشنیوں کا شہر ہوا کرتا تھا، جس شہر میں سیاح گھومنے کی غرض سے آیا کرتے تھے، اس شہر کراچی کو منصوبہ بندی کے تحت گندگی اور غلاظت میں تبدیل کیا جارہا ہے، 20 سال اقتدار میں رہنے والی جماعتوں نے کراچی کی عوام سے ووٹ تو لیا لیکن عوام کو سہولیات مہیا کرنے میں ناکام نظر آئیں، کراچی شہر کا یہ حال سیاسی پنجہ آزمائی کا نتیجہ ہے۔

علامہ ناظر عباس تقوی کا کہنا تھا کہ اگر حکومتیں چاہیں تو کراچی شہر کو دوبارہ اُس کی اصلی حالت میں لایا جاسکتا ہے، لہذا ہمارا مطالبہ یہ ہے کہ سیاست سے بالاتر ہوکر کراچی کو ازسر نو تعمیر کیا جائے اور کراچی میں ایمرجنسی نافذ کرکے شہر کراچی میں ترقیاتی کام اور صفائی کرائی جائے، افسوس کے ساتھ کہنا پڑتا ہے کہ ایٹمی ملک ہونے کے باوجود ہمارے شہر میں کچڑا اٹھانے کا نظام بھی موجود نہیں ہے، شہر کراچی میں اس وقت گندگی اور غلاظت کی وجہ سے شدید تعفن پھیل رہا ہے جس کی وجہ سے وبائی امراض پھیلنے کا شدید خطرہ ہے، وفاقی اور صوبائی حکومت کو چاہیئے کہ وہ جلد از جلد کراچی کی سنگین صورتحال پر اقدامات کو یقینی بنائیں۔

Tags

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button