دنیاہفتہ کی اہم خبریں

میرے والد ابراھیم زکزاکی کو شہید کرنے کی سازش کی جا رہی ہے۔

شیعہ نیوز (پاکستانی شیعہ خبر رساں ادارہ) نائیجیریا کی اسلامی تحریک کے سیکرٹری جنرل آیت اللہ شیخ ابراہیم زکزاکی کے تنہاء باقی بچ جانے والے فرزند محمد ابراہیم زکزاکی نے نائیجیریا کی جیل میں قید اپنے والدین کی خراب جسمانی حالت اور ان کے علاج معالجے پر حکومت کی طرف سے لگائی گئی مکمل پابندی کی طرف اشارہ کرتے ہوئے اپنے ایک پیغام میں لکھا ہے کہ میرے والدین کی خراب جسمانی حالت کو عمدی طور پر نظرانداز کر کے انہیں قتل کرنے کی سازش کی جا رہی ہے۔

علاوہ ازیں نائیجیریا میں واقع شیخ زکزاکی کی اسلامی تحریک کے دفتر نے بھی اپنے ایک بیان میں کہا ہے کہ آیت اللہ شیخ ابراہیم زکزاکی اور ان کی اہلیہ کی جسمانی حالت تیزی کے ساتھ خراب ہو رہی ہے جبکہ حکومت کی طرف سے ان کے علاج معالجے اور طبی معائنے پر بدستور پابندی عائد ہے۔

واضح رہے کہ آیت اللہ شیخ ابراہیم زکزاکی اور ان کی اہلیہ کو سال 2015ء کے ’’زاریا قتل عام‘‘ کے بعد سے تاحال بغیر کسی الزام کے قید میں رکھا گیا ہے جبکہ ان کے 7 میں سے 6 بیٹے نائیجیرین پولیس اور فوج کی براہ راست فائرنگ سے شہید ہو چکے ہیں۔

آیت اللہ شیخ ابراہیم زکزاکی اور ان کی اہلیہ کو سال 2015ء میں زخمی حالت میں گرفتار کیا گیا تھا جس کے بعد سے تاحال ان کے طبی معائنے اور علاج معالجے پر حکومت نے پابندی لگا رکھی ہے درحالیکہ سال 2015ء کے قتل عام کے دوران نائیجیرین فوج کی طرف سے فائر کئے مارٹر گولوں کے ٹکڑے تاحال شیخ زکزاکی کے جسم میں باقی ہیں۔

Tags
Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close