دنیا

ہیگ کی عالمی عدالت کن صیہونی حکام کو سزا سنا سکتی ہے؟

شیعہ نیوز:مقبوضہ بیت المقدس سے شائع ہونے والے ایک اخبار نے لکھا ہے کہ وزیر اعظم اور موجودہ اور سابق وزیر جنگ کو عالمی فوجداری عدالت کی جانب سے حراست میں لیے جانے کا حکم مل سکتا ہے۔

جیروسلم پوسٹ نے لکھا ہے کہ آئي سی سی جنگي جرائم میں ملوث ہونے کے سبب ممکنہ طور پر کئي صیہونی حکام کے خلاف گرفتاری کا وارنٹ جاری کر سکتی ہے۔ اخبار کا کہنا ہے کہ ہیگ کی عالمی عدالت جن لوگوں کو سزا سنا سکتی ہے ان میں سب سے پہلے وہ لوگ آتے ہیں جنھوں نے سنہ دو ہزار چودہ میں ہوئي غزہ جنگ کے سلسلے میں فیصلے کیے تھے۔ دوسرا گروہ ان لوگوں کا ہو سکتا ہے جنھوں نے غزہ کے سرحدی بحران میں کردار ادا کیا تھا اور تیسرا گروہ ان لوگوں کا ہوگا جنھوں نے صیہونی کالونیوں کی توسیع کے فیصلے میں کردار ادا کیا تھا۔

جیروسلم پوسٹ کے مطابق صیہونی وزیر اعظم بنیامن نیتن یاہو تینوں گروہوں میں آتے ہیں اور اس وقت کے صیہونی آرمی چیف بینی گانٹز اور اس وقت کے وزیر جنگ موشے یعلون کی گرفتاری کا سب سے زیادہ امکان ہے۔ اسی کے ساتھ غزہ جنگ میں دخیل کچھ صیہونی کمانڈروں کو بھی سزا دی جا سکتی ہے۔

Tags

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close